RSS

Yeh bhee gunah hain….

17 May

“وہ گناہ جو گناہ سمجھ کے نہیں کئےجاتے”

جیسے ریڑھی سے انگور، مونگ پھلی، چنے وغیرہ خریدنے سے پہلے ریٹ پوچھتے ہوئے بغیر اجازت کھانا شروع کر دینا،

جیسے گذرتی ہوئی ٹرالی سے دوڑ کر گنا کھینچ لینا،

جیسے موٹر سائیکل پہ ایسا ہارن لگوانا کہ جو سنے راستہ دینے پہ مجبور ہوجائے،

جیسے نہاتے ہوئے زیادہ پانی بس ڈالتے چلے جانا،

جیسے وضو کے وقت مسواک کی سنت اداکرتے ہوئے ٹونٹی پہ قبضہ جمائے رکھنا جب دوسرے لوگ وضو کے لئے خالی جگہ کا انتظار کر رہے ہوں،

جیسے نمازیوں کے سروں پر سے گذرتے ہوئے پہلی صف میں پہنچنا،

جیسے صبح کے وقت دوکان پہ بلند آواز سے تلاوت لگا دینا ،

جیسے مسجد میں پہنچ کر باتیں کرتے رہنا،

جیسے وضو کرنے کے لئے اپنے شوز اتار کر بغیر اجازت کسی اور کی چپل پہن لینا،

جیسے رمضان میں ہر تراویح پڑھنے والے سے فنڈز مانگنا تاکہ مٹھائی بانٹی جا سکے،

جیسے شادی کے موقع پہ دلہن کی بہن کے ہاتھوں دولہا کو دودھ پیش کرنا،

جیسے کوڑا کرکٹ گلی میں پھینکنا،

جیسے سفر کرتے ہوئے اس انداز سے ناک صاف کرنا کہ چھینٹے ساتھ گذرنے والے پہ بھی اثر انداز ہوں،

جیسے محفل میں بیٹھ کر دیگر حاضرین کو نظر انداز کرتے ہوئے فون میں مصروف ہو جانا،

ذرا ہم سوچیں تو سہی
ہم کتنے گر چکے ہیں کہ گناہ کو گناہ ہی نہیں سمجھتے۔
اللہ ہمیں سمجھ عطا فرمائے۔ آمین

Advertisements
 
Leave a comment

Posted by on May 17, 2016 in Stress management, Tips

 

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

 
%d bloggers like this: